Urdu Chronicle

Urdu Chronicle

ٹاپ سٹوریز

سپریم کورٹ کے باہر دھرنے کا مقصد چیف جسٹس کو دباؤ میں لانا ہے،مجھے 10سال قید،پارٹی پرپابندی کامنصوبہ بے نقاب ہوگیا،عمران خان

Published

on

چیئرمین پاکستان تحریک انصاف عمران خان نے دعویٰ کیا ہے کہ حکومت بغاوت کے کسی قانون کی آڑ میں ان کو دس برس قید کرنے اور ان کی جماعت، پاکستان تحریک انصاف، پر پابندی عائد کرنے کا منصوبہ بنائے ہوئے ہے، بالکل ویسا منصوبہ جیسے مشرقی پاکستان (موجودہ بنگلہ دیش) میں عوامی لیگ پر عائد کی گئی تھی۔

اتوار کی  رات ٹوئٹر پر سلسلہ وار ٹویٹس میں سابق وزیر اعظم نے اس مبینہ منصوبے کو لندن پلان کا نام دیا اور الزام عائد کیا کہ اب لندن پلان کھل کر سامنے آ چکا ہے۔ میں قید میں تھا تو تشدد کی آڑ میں انھوں نے خود ہی جج، جیوری اور فیصلے پر عملدرآمد کرنے والے کا کردار اپنا لیا۔

’اب ان کا منصوبہ یہ ہے کہ بشریٰ بیگم کو قید کر کے مجھے اذیت پہنچائیں اوربغاوت کے کسی قانون کی آڑ لے کرمجھےآئندہ دس برس کے لیے قید کر دیں، اس کے بعد تحریک انصاف کی بچی کھچی قیادت اور کارکنان کے گرد بھی گھیرا تنگ کریں اور بلآخر پاکستان کی سب سے بڑی اور وفاقی جماعت پر پابندی لگا دیں (جیسے انھوں نے مشرقی پاکستان میں عوامی لیگ پر لگائی۔)

عمران خان نے ٹویٹر پر لکھا کہ یہ یقینی بنانے کے لیے کہ عوام کی جانب سے کوئی ردّعمل نہ آئے، انھوں نے دو کام کیے ہیں، پہلا، محض تحریک انصاف کے کارکنان ہی کو خوفزدہ نہیں کیا جا رہا بلکہ عام شہریوں کے دلوں میں بھی خوف بٹھایا جا رہا ہے۔ دوسرا: میڈیا پر پوری طرح قابو پایا جا چکا ہے اور بزورِجبراس کی آواز دبائی جا چکی ہے۔

عمران خان نےدعویٰ کیا کہ ان کا منصوبہ انٹرنیٹ سروسز اور سوشل میڈیا، جو پہلے ہی جزوی طور پر چل رہا ہے, کو پوری طرح بند کرنے کا ہے۔

عمران خان نے الزام لگایا کہ  کہ ’یہ لوگوں کے دلوں میں اتنا خوف بٹھانا چاہتے ہیں کہ جب یہ مجھے گرفتار کرنے آئیں تو لوگ باہر نہ نکلیں۔ سپریم کورٹ کے باہر پی ڈی ایم جماعتوں کے احتجاج کا واحد مقصد بھی چیف جسٹس آف پاکستان کو مرعوب کرنا ہے تاکہ وہ آئین پاکستان کےمطابق کوئی فیصلہ صادر کرنے سے باز رہیں۔ ۔‘

عمران خان نے کہا کہ وہ عوام کو یقین دلانا چاہتے ہیں کہ وہ ’حقیقی آزادی‘ کے لیے آخری دم تک لڑیں گے، کیونکہ وہ غلامی پر موت کو ترجیح دیتے ہیں۔

Continue Reading
Click to comment

Leave a Reply

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

تازہ ترین8 گھنٹے ago

ٹیکس اہداف کی صورتحال تسلی بخش نہیں، شرائط پوری نہ ہوئیں تو منی بجٹ لانا پڑے گا، آئی ایم ایف

Uncategorized9 گھنٹے ago

قریبی دفاعی تعاون کے لیے جرمنی اور برطانیہ کے مشترکہ دفاعی اعلامیہ پر دستخط

تازہ ترین9 گھنٹے ago

یورپ کے دفاع کے کئی کمزور پہلو نیٹو کے لیے باعث تشویش

تازہ ترین9 گھنٹے ago

نیتن یاہو کے کانگریس کے خطاب سے پہلے مظاہرے، کئی ارکان کانگریس کا شرکت نہ کرنے کا اعلان

پاکستان12 گھنٹے ago

پنجاب اسمبلی کے سامنے پی ٹی آئی کا احتجاجی کیمپ، نیلی پری نے اداکار طاہر انجم کو روک کر تشدد کا نشانہ بنا ڈالا، ہمارا کوئی تعلق نہیں، اپوزیشن لیڈر

Uncategorized12 گھنٹے ago

تمام سیاسی جماعتیں سپریم کورٹ کے ججز کی تعداد بڑھانے پر متفق

تازہ ترین13 گھنٹے ago

ایجنڈے کے تحت بیانیہ بنایا گیا کہ میں نے جی ایچ کیو پر احتجاج کے لیے اکسایا، عمران خان

تازہ ترین13 گھنٹے ago

وفاقی حکومت نے پٹرولیم مصنوعات کی قیمت مقرر کرنے کا اختیار چھوڑنے کا فیصلہ کر لیا

مقبول ترین