Urdu Chronicle

Urdu Chronicle

تازہ ترین

سپیکر نے گالیاں بکنے، باجے بجانے والوں کے خلاف مجبوراً ایکشن لیا، تضحیک روکنے کے لیے رولز بنائے جائیں، بلاول بھٹو زرداری

Published

on

پیپلز پارٹی کے شریک چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ کل   اسمبلی میں گالیاں نکالی گئیں، باجے بجائے گئے۔اپوزیشن نے بد ترین تاریخ رقم کی۔

بلاول بھٹو نے پارلیمنٹ ہاؤس میں صحافیوں سے بات کرتے ہوئے کہا کہ پارلیمان کا تقدس پامال کیا گیا۔اسپیکر قومی اسمبلی نے آج مجبوراً ایک قدم اٹھایا ،اس سے بہتری آئے گی۔پوری دنیا میں کل بہت برا پیغام گیا۔

چیئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹونے کہا کہ صدر کےخطاب کے دوران  اپوزیشن کا رویہ انتہائی نامناسب تھا۔ایسے رولز طے کیے جائیں جس میں ایک دوسرے کی تضحیک نہ کی جائے۔

بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ صدر مملکت نے تاریخی تقریر کی اور 7 ویں بار صدارتی خطاب کرکہ تاریخ رقم کی،صدر مملکت نے ایک روڈ میپ دیا، ذاتی عناد کو بالائے طاق رکھ کر ملک کے وسیع تر مفاد میں آگے بڑھنے پر صدر مملکت نے زور دیا،اپوزیشن کی پارلیمان کی کاروائی پر کوئی توجہ نہیں۔

بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ اپوزیشن کی توجہ صرف خود کو ریلیف دلوانے پر ہے،اسپیکر نے آج جو ایکشن لیا ہےاس سے بہتری آئے گی،ہم تو چاہتے تھے کہ ایسا اقدام اٹھانے کی ضرورت نہ پڑے،ایسے رولز طے کیے جائیں جس میں ایک دوسرے کی تضحیک نہ کی جائے۔

بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ اپوزیشن والے آصفہ بھٹو ایک اکیلی لڑکی سے ڈرتے ہیں،سعودی وزیر خارجہ کا دورہ کامیاب ترین دورہ تھا، اس دورے کے نتیجے میں پاکستان کی عوام کو روزگار ملے گا اور ملک کی معیشت سنبھلے گی۔

بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ پی ٹی آئی پہلے بیانات دلواتی ہے پھر جب اس پر ردعمل آتا ہے تو وہ بیان واپس لیتی ہے، پاکستان پیپلز پارٹی نے جو منشور پیش کیا اس پر وزیراعظم پاکستان نے بھی اپنی تقریر پر زور دیا،امید ہے حکومت بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام کو آگے بڑھائے گی۔

بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ آج لانڈھی میں دہشت گردی کا ناخوشگوار واقعہ پیش آیا،پولیس جوانوں نے قربانی کی عمدہ مثال قائم کی،افسوس کی بات ہے دہشتگرد ایک بات پھر سر اٹھا رہے ہیں،وفاقی اور صوبائی حکومتوں کو اس پر ہنگامی اقدامات لینا ہوں گے۔

بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ مفاہمت کے حوالے سے صدر مملکت نے واضح پیغام دیا ہے،تالی دو ہاتھوں سے بجتی ہے،پی ٹی آئی کے اقدامات سے قومی مفاہمت کو جھٹکا پہنچا۔

پچیس سال سے شعبہ صحافت سے منسلک ہیں، اردو کرانیکل کے ایڈیٹر ہیں، اس سے پہلے مختلف اخبارات اور ٹی وی چینلز سے مختلف حیثیتوں سے منسلک رہے، خبریں گروپ میں جوائنٹ ایڈیٹر رہے، ملکی اور بین الاقوامی سیاست میں دلچسپی رکھتے ہیں، ادب اور تاریخ سے بھی شغف ہے۔

Continue Reading
Click to comment

Leave a Reply

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

مقبول ترین