Urdu Chronicle

Urdu Chronicle

تازہ ترین

آئی ایم ایف کے ساتھ پہلے دن کے مذاکرات مکمل، 1.1 ارب ڈالر کی قسط پر بات جاری

Published

on

پاکستان اورعالمی مالیاتی فنڈ (آئی ایم ایف) کے درمیان 3 ارب ڈالر کے اسٹینڈ بائے ارینجمنٹ (ایس بی اے) پر دوسری نظرِ ثانی کے لیے وزارت خزانہ میں پہلا سیشن مکمل ہوگیا، اس سیشن میں آئی ایم ایف وفد کی قیادت نیتھن پوٹر نے کی۔

وفاقی وزیر خزانہ محمد اورنگ زیب کی قیادت میں پاکستانی ٹیم میں گورنراسٹیٹ بینک جمیل احمد اورچیئرمین ایف بی آرامجد زبیر ٹوانہ بھی شامل تھے۔

یہ مذاکرات 14 سے 18 مارچ تک شیڈول ہیں تاہم اس میعاد میں 21 یا 22 مارچ تک توسیع بھی کی جاسکتی ہے۔

پاکستان کی معاشی ٹیم کے تعارف کے بعد آئی ایم ایف کو قرض پروگرام پرعملدرآمد کے عزم سے، معاشی بحالی کے لیے حکومتی ترجیحات سے آگاہ کیا گیا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ فریقین کےدرمیان مزید مذاکرات مقامی ہوٹل میں ہوں گے۔

پاکستان اورآئی ایم ایف کے درمیان آخری قسط کیلئے اسٹینڈبائی ارینجمنٹ کےتحت مذاکرات سے قبل پاکستان آئی ایم ایف کےتمام اہداف پورے کرچکا ہے۔ اسٹاف لیول سمجھوتہ ہونے کی صورت میں آئی ایم ایف کے ایگزیکٹو بورڈ کی منظوری سے ایک ارب 10 کروڑ ڈالر کی پہلی قسط جاری ہوگی۔

وزیرخزانہ نے دعویٰ کیا ہے کہ آئی ایم ایف پروگرام کے بعد پاکستان کی کریڈٹ ریٹنگ بہترہوگی۔

واضح رہے کہ آئی ایم ایف کےساتھ 3ارب ڈالرکا قرض پروگرام جولائی2023 میں طےپایا تھا، اس حوالے سے پاکستان کو 1.9 ارب ڈالر پہلے ہی جاری کیے جا چکے ہیں۔

وزارتِ خزانہ نےاس حوالے سے بتایا تھا کہ پاکستان نے تمام شرائط پوری کرنے کے علاوہ مذاکرات کامیاب بنانے کے لیے تمام بیان کردہ اہداف بھی حاصل کرلیے ہیں۔ یہ حتمی نظرِثانی ہے جس کے بعد اسٹاف لیول سمجھوتہ متوقع ہے۔

منگل کو وفاقی وزیر خزانہ نے کہا تھا کہ حکومت کی اکنامک ٹیم ایک اور توسیعی امدادی پروگرام کے حوالے سے بات چیت کرے گی۔ حکومت کو مزید فنڈز کی ضرورت ہے۔ ایک اور بڑے پیکج کے حصول کے لیے مزید بات چیت آئندہ ماہ آئی ایم ایف اور عالمی بینک سے ہونے والی میٹنگز میں کی جائے گی۔

برطانوی خبر رساں ادارے کے مطابق پاکستان نے آئی ایم ایف کی طرف سے ریویو کی کامیابی کے لیے پیش کی جانے والی تمام شرائط مکمل کرلی ہیں۔ اب اسٹاف لیول کے سمجھوتے کی توقع کی جاسکتی ہے۔

آئی ایم ایف کے ایک ترجمان کے مطابق پاکستان سے مذاکرات کے دوران زیادہ توجہ موجودہ ایس بی اے سپورٹیڈ پروگرام کی تکمیل پر ہوگی۔ اس کی میعاد اپریل 2024 میں ختم ہو رہی ہے۔

آئی ایم ایف کا یہ بھی کہنا ہے کہ پاکستان کی طرف سے درخواست کی صورت میں درمیانی مدت کے قرضے کے پروگرام کو فائنلائز کیا جائے گا۔

Continue Reading
Click to comment

Leave a Reply

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

تازہ ترین11 منٹ ago

حمل کے ابتدائی 12 ہفتوں میں اسقاط حمل پر پابندی ختم کر دینی چاہئے، جرمنی کے کمیشن کی سفارش

تازہ ترین21 منٹ ago

جارجیا کی پارلیمنٹ میں ’ غیرملکی ایجنٹ‘ کا بل پیہش کرنے پر ہنگامہ، گھونسے، مکے چل گئے

تازہ ترین35 منٹ ago

ٹرمپ فوجداری مقدمے کا سامنا کرنے والے پہلے امریکی صدر بن گئے

تازہ ترین2 گھنٹے ago

نواز ایک بار پھر سیاست میں متحرک، رواں ہفتے سے پارٹی سیکرٹریٹ میں ملاقاتوں کا سلسلہ شروع کریں گے

تازہ ترین2 گھنٹے ago

آج پنجاب میں طوفانی بارشوں کا امکان،ڈی جی خان، کوہ سلیمان میں طغیانی، مری اور گلیات میں لینڈ سلائیڈنگ کے خدشات

پاکستان3 گھنٹے ago

نکاح کیس میں عمران خان، بشریٰ بی بی کو ریلیف نہ مل سکا،سماعت 24 اپریل تک ملتوی

پاکستان3 گھنٹے ago

ملک میں رجسٹرڈ ووٹرز کی تعداد 13 کروڑ ایک لاکھ 36 ہزار ہوگئی

تازہ ترین3 گھنٹے ago

کچے کے ڈاکوؤں سے کہتا ہوں سرنڈر کردیں، سرداروں کی میٹنگ بلائی ہے، جھگڑے ختم کرنے کو کہیں گے، وزیر داخلہ سندھ

مقبول ترین